اے پی سی میں طالبان سے مذاکرات اور ڈرون حملوں کا معاملہ سلامتی کونسل میں لیجانے کے فیصلے خوش آئند ہیں۔ حافظ محمد سعید

APC

لاہور- امیر جماعةالدعوة پاکستان پروفیسر حافظ محمد سعید نے کہا ہے کہ اے پی سی میں طالبان سے مذاکرات اور ڈرون حملوں کا معاملہ سلامتی کونسل میں لیجانے کے فیصلے خوش آئند ہیں۔ان فیصلوں پر جلد عمل درآمد ہوناچاہیے۔ امریکہ کی نام نہاد دہشت گردی کے خلاف جنگ سے نکل کر ملکی سلامتی و خودمختاری کو مدنظر رکھتے ہوئے پالیسیاں ترتیب دی جائیں۔بلوچستان ،سندھ اور دیگر شہروں و علاقوںمیں انڈیا کی دہشت گردی کو پوری دنیا کے سامنے بے نقاب کرنے کی ضرورت ہے۔اپنے بیان میں انہوںنے کہاکہ اسلام دشمن قوتیں پاکستان کو میدان جنگ بنا کر رکھنا چاہتی ہیں۔ ڈرون حملے روکنا انتہائی ضروری ہے۔اس مقصد کیلئے پاکستان کو جرا ¿تمندانہ فیصلے کرنے چاہئیں۔حافظ محمد سعید نے کہاکہ بیرونی قوتیں پاکستان میںمسلمانوں کو آپس میں الجھا کر رکھنا چاہتی ہیں تاکہ وہ یہاں ٹکراﺅ کی کیفیت پیدا کر کے اپنے مذموم ایجنڈوں کو پورا کر سکیں۔اے پی سی میں طالبا ن سے مذاکرات کے فیصلہ کی پوری قوم حمایت کرتی ہے اور ان فیصلوں پر جلد از جلد عمل درآمد چاہتی ہے۔دشمنان اسلام کی سازشوں کے مقابلہ کیلئے اندرونی طور پر ملک میں اتحاد ویکجہتی کا ماحول پیدا کرنا انتہائی ضروری ہے۔انہوںنے کہاکہ بھارت نے افغانستان میں قونصل خانوں کے نام پر دہشت گردی کے اڈے بنا رکھے ہیں جہاں دہشت گردوں کو تربیت دیکر بلوچستان، سندھ ، خیبر پختونخواہ اور دیگر علاقوں میں داخل کیا جارہا ہے۔حکومت پاکستان کو اس سلسلہ میں بھی سنجیدگی کا مظاہرہ کرنا چاہیے اور بھارت کی پاکستان میں بڑھتی ہوئی مداخلت اور دہشت گردی کے خاتمہ کیلئے ہر ممکن اقدامات اٹھانے چاہئیں۔انہوںنے کہاکہ مسئلہ کشمیر کے حل اور بھارتی دہشت گردی ختم ہونے تک خطہ میں کسی صورت امن قائم نہیں ہو سکتا۔

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s